پاکستان: تنخواہوں میں اضافے کے مطالبہ پر اساتذہ کا مظاہرہ

https://www.urdu.indianarrative.com/Pakistan6.jpg

پاکستان: تنخواہوں میں اضافے کے مطالبہ پر اساتذہ کا مظاہرہ

پاکستان: تنخواہوں میں اضافے کے مطالبہ پر اساتذہ کا مظاہرہ

اسلام آباد ، 23 فروری (انڈیا  نیرٹیو)

منگل کے روز اساتذہ کی تنخواہوں میں اضافے کے مطالبہ پرپاکستانی مقبوضہ کشمیر کے شہر مظفرآباد میں مظاہرے میں شدت آگئی۔مظاہرین نے انتخابات کے دوران ڈیوٹی نہ کرنے کا انتباہ دیا۔

مظاہرہ میں آئے ایک ٹیچر کا کہنا تھا کہ اگر ہمارے مطالبات پورے نہیں ہوئے تو اسکول اسی طرح بند رہیں گے۔ نیز ، عام انتخابات میں حکومت کو اساتذہ کا تعاون حاصل نہیں ہوگا۔ایک دیگر ٹیچر کا کہنا تھا کہ ہم نہ صرف اسکولوں کو بند رکھیں گے بلکہ سڑکوں پر احتجاج و مظاہرہ بھی کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ ہم سرکاری کاموں کا بائیکاٹ کریں گے۔ نیز انتخابی کام ، بورڈ ورک اور بلاک کا کام بھی نہیں کیا جائے گا۔

ادھر پولیس نے مظاہرین کے ہجوم کو منتشر کرنے کے لیے آنسو گولے داغے اور پانی کے بوچھاڑوں کا استعمال کیا۔پاکستان میں اساتذہ اپنی تنخواہوں کو لے کر سخت ہیجانی کیفیت سے جوجھ رہے ہیں۔ پاکستان حکومت اساتذہ کی طرف کوئی خاص نظر التفات سے بچ رہی ہے۔ اساتذہ، پاکستانی حکومت کے رویوں کے پیش نظر سڑکوں پر ہیں اور ان سب کا یہ بھی کہنا ہے کہ اگر حکومت نے ان کی طرف توجہ نہیں تو مزید یہ مظاہرے سخت کیے جائیں گے۔

عمران خان حکومت میں آنے سے قبل یہ برملا کہہ رہے تھے کہ اگر ہماری حکومت آئے گی تو ہم اساتذہ سمیت تمام عملے کی تنخواہ میں خاطر خواہ اضافہ کریں گے اور بروقت تنخواہ ادا کریں گے۔ تمام عملوں نے ان کی باتوں پر اعتماد کرتے ہوئے الیکشن میں بھرپور مدد کی لیکن عمران حکومت اب ان کے مسائل سے بھاگ رہے ہیں۔

اساتذہ کے مسائل کب تک حل ہوں گے؟ اس سلسلے میں احتجاج کر رہے ہیں ایک صاحب نے بتایا کہ ہم لوگوں نے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ ہماری بات سنے ورنہ ہم سڑکوں پر اتر کر مظاہرے میں سختی پیدا کریں گے اور حکومت کو اس کی بھاری قیمت چکانی پڑے گی۔